کوٹلی پولیس نے اندھے قتل کو ٹریس کر کے قاتل گرفتا کر لیا 2,165

کوٹلی پولیس نے اندھے قتل کو ٹریس کر کے قاتل گرفتا کر لیا

کوٹلی( سردار محمد نصیر )کوٹلی پولیس نے اندھے قتل کو ٹریس کر کے قاتل گرفتا کر لیاعید کے دوسرے روز نامعلوم قاتل کے ہاتھوں قتل ہونے والے حساس ادارے کی لانڈری کے ٹھیکیدار کا قاتل بہنوئی نکلا،ملزم کو عید پر گھر جانے کے لیے پیسے نہ ملنے پر دونوں کے درمیان تلخ کلامی ہوئی جس پر قاتل نے مقتول کے گلے میں رسی ڈال کر قتل کرنے کے بعد اس کے منہ میں کوکنگ آئل ڈال کر نعش کو چھت سے لٹکا نے کی ناکام کوشش کر کے خودکشی کا ڈرامہ رچایا، پولیس نے نعش کا پوسٹ مارٹم کروانے کے بعد 174ض ف کی کاروائی کرتے ہوئے مشکوک افراد سمیت بہنوئی کو شامل تفتیش کیا تو اس نے انکشاف کیا کہ ظفر کو میں نے قتل کیا ایس پی کوٹلی ریاض مغل کی میڈیا بریفنگ تفصیلات کے مطابق ایس پی کوٹلی ریاض مغل نے گزشتہ روز اپنے آفس میں میڈیا نمائندگان کو بتایا کے 4اپریل کو رات 8:30پر اطلاع ملی کے نکیال روڈ لاری اڈے کے قریب راجہ عبدالحمید کی بلڈنگ میں رہائش پذیر آرمی کے سول کنٹریکٹر دھوبی کی نعش پڑی ہوئی ہے اطلاع ملنے پر ایس ایچ او تھانہ کوٹلی راجہ توقیر ہمراہ نفری موقع پر پہنچ آئے اور جائے وقوعہ کا جائزہ لینے کے بعد نعش کو قبضہ میں لے کر پوسٹ مارٹم کے DHQہسپتال منتقل کر کے مرگ مشتبہ 174ض ف کی کاروائی کرتے ہوئےASPخرم اقبال کی نگرانی میں تفتیش کا سلسلہ رواں رکھتے ہوئے اس کے پاس کام کرنے والے بہنوئی محمد شبیر ولد خان محمد ساکن کلہ پناکھ کو جیو فینسنگ کے ذریعے ٹریس کرتے ہوئے شامل تفتیش کیا تو اس نے چونکا دینے والا انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ میں مقتول ظفر کے پاس تنخواہ دار ملازم بھی تھا کافی عرصہ سے میری تنخواہ بقایا تھی وقوعہ کے روز میری اور ظفر کے درمیان لین دین کے معاملہ پر تلخ کلامی ہوئی اور میں نے غصے میں آ کر موقع پر پڑی رسی کا پھندہ بنا کر مقتول کے گلے میں ڈال کر قتل کر دیا اور واقعہ کو خودکشی کا رنگ دے کر نعش کو چھت سے لٹکا دیا تھا ملزم کے اقبال جرم کے بعد پولیس نے مقدمہ علت نمبر 179/22 بجرائم 302 APCکے تحت درج کر کے مزید کاروائی شروع کردی اندھے قتل کو ٹریس کرنے والی ٹیم مبارکباد کی مستحق ہے اس قتل کی وجہ سے عوام میں بھی بے چینی کی لہر دوڑ گئی تھی اندھے قتل کو ٹریس کرنے پر عوام کا پولیس پر اعتماد بحال ہوا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں