پاکستان سمیت آزاد کشمیر بھرمیں یوم دفاع پاکستان کل قومی جوش و جذبے سے منایا جائیگا،پاک فوج زندہ باد پاکستان پائندہ باد ریلیاں نکالی جائینگی

6th-September-Pakistan-Defence-Day-Youm-e-difa-Wallpapers-13

مظفرآباد( پی آئی ڈی ) پاکستان سمیت آزاد کشمیر بھرمیں یوم دفاع پاکستان آج قومی جوش و جذبے سے منایا جائیگا، پاکستان زندہ باد،پاک فوج زندہ باد ریلیاں نکالی جائینگی ،اس حوالہ سے انتظانات کو حتمی شکل دیدی گئی، اس موقع پرآزاد جموں و کشمیر کے صدرمحمد مسعود خان ، وزیر اعظم راجہ محمد فاروق حیدر خان اور وزیر اطلاعات مشتاق احمد منہاس نے کہا کہ 1965میں پاکستان کے عوام اور افواج پاکستان نے بیرونی جارحیت کے خلاف ایسی مزاحمت کی تھی جس کے نتیجے میں دشمن کو ناکامی کا منہ دیکھنا پڑا اور اس لحاظ سے یہ دن ہماری قوم کے اتحاد کا نشان بن چکا ہے ۔ستمبر1965کی جنگ دراصل ایک چیلنج تھی جس کو قوم نے قبول کیا اور اپنی صلاحیتوں کو بروئے کار لا کر اپنے سے کئی گنا بڑی طاقت کے جارحانہ عزائم کو ناکام بنایا۔ان خیالات کا اظہا ر انہوں نے یوم دفاع پاکستان کے موقع پراپنے الگ الگ پیغامات میں کیا ۔اس موقع پر صدر آزادجموں و کشمیرمحمد مسعود خان نے کہا کہ یوم دفاع پاکستان ہماری تاریخ کا ایک یاد گار دن ہے آج سے 51سال قبل اس روز ہم نے ملی وحدت، یکجہتی اور حب الوطنی کا ایسا شاندار مظاہرہ کیا کہ ہماری آنے والی نسلیں بھی بجا طور پر اس پر فخر کرسکیں گی ۔6؍ ستمبر1965اور اس کے بعد آنے والے چند دنوں میں پاکستان کی مسلح افواج نے اپنے سے کئی گنا بڑے حملہ آور کا غرور خاک میں ملا دیا اور اسکے نا پاک عزائم پاش پاش کردیئے ۔ انہوں نے کہا کہ ستمبر 1965کے واقعات ہمارے لیے قابل فخر ہی نہیں ایمان افروز اور سبق اموز بھی ہیں ۔ ہماری مسلح افواج نے شجاعت قربانی اور ایثار کے ساتھ ساتھ اعلیٰ جنگی مہارت ،حکمت عملی اور نظم و ضبط کے ایسے مظاہرے پیش کیے جن کی مثالیں دنیا کی تاریخ میں کم نظر آتی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ دفاع وطن کی اس جنگ میں ہماری مسلح افواج کو عوام کی بھر پور حمایت بھی حاصل تھی۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں کشمیری عوام نے اپنے حق کے لیے لازوال قربانیاں پیش کی ہیں۔ بھارت نے نہتے اور بے سروسامان کشمیریوں پر ظلم و ستم کی انتہا کر دی ہے ۔ لیکن کشمیری عوام ان مظالم کا بڑی پامردگی سے مقابلہ کر رہے ہیں ۔ان کے حوصلے بلند ہیں انشااللہ وہ دن دور نہیں جب وہ اپنی آزادی کی منزل حاصل کر کے رہیں گے ۔صدر نے کہا کہ بھارت اور پاکستان کے درمیان مسئلہ کشمیر مذاکرات کا عمل اسوقت تک کامیاب نہیں ہو گا جب تک کشمیریوں پر بھارتی افواج کا ظلم و ستم بند نہیں ہوتا انہوں نے کہا کہ بھارت مسئلہ کشمیر الجھانے کے بجائے ایسے حالات پیدا کرئے تا کہ کشمیری عوام سکھ کا سانس لیں اور مسئلہ کشمیر پر مثبت پیش رفت ممکن ہو سکے ۔وزیر اعظم آزاد کشمیرراجہ محمد فاروق حیدر خان نے کہا یوم دفاع پاکستان کے موقع پر ہم اپنی بہادر افواج کے بے مثال کارناموں پر نہ صرف فخر کرتے ہیں بلکہ دفاع پاکستان کیلئے جانوں کے نذرانے پیش کرنے والے سرفروشوں کوعظمت کی پوری قوم زبردست خراج عقیدت اور سلام بھی پیش کرتی ہے ۔مسلح افواج نے ہر آزمائش کی گھڑی میں اپنے ملک کی نظریاتی جغرافیائی سرحد کی حفاظت کی اوربیرونی سازشوں کو ناکام بنایا ۔ یہ بات ہمارے لیے قابل فخر ہے کہ ہماری مسلح افواج اپنے وطن کے دفاع کیلئے بے مثال قربانیاں دے رہی ہے اور وہ کسی بھی جارحیت کا مقابلہ کرنے کی بھر پور صلاحیت رکھتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ تحریک آزادی کشمیر موجودہ حکومت کی اولین ترجیح ہے مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے بین الاقوامی سطح پر مثبت پیش رفت ہوئی ۔ بھارت مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کر رہا وہ نہتے اور بے سروسامان کشمیریوں کا قتل عام جاری رکھے ہوئے ہے۔ بھارت کو یاد رکھنا ہو گا کہ کشمیری حق خودارادیت کے حصول کے لیے جدوجہد جاری رکھیں گے ۔ بھارت جتنا بھی ظلم روا رکھے وہ کشمیریوں کو انکا پیدائشی حق لینے سے نہیں روک سکتا۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں جذبہ جہاد سے سرشار کشمیری حریت پسند پوری قوت سے بھارتی افواج سے بر سر پیکار ہیں ۔ریاست کے طول و عرض میں آج پھر بھارتی افواج کشمیریوں پر ظلم و ستم ڈھا رہی ہے اس کے باوجود وہ کشمیریوں کے حوصلے پست نہیں کر سکی اس وقت حریت قیادت نظر بند ہے ۔ خواتین کی عصمت دری ، بچوں کا قتل عام ، ٹارچر سیل ، پوری کی پوری بستیوں کو نذر آتش کرنا اور اسی طرح کے کئی اور گھٹیا حربے درحقیت بھارتی افواج کی روز افزوں کمزوری کی دلیل ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی حکمران صاف دیکھ رہے ہیں کہ ریاست جموں و کشمیر کے مسلمان کسی بھی صورت میں بھارت کے ساتھ رہنے پر تیار نہیں اور پاکستان ہی ان کی منزل مقصود ہے ۔وزیر اطلاعات مشتاق احمد منہاس نے کہا کہ یوم دفاع پاکستان کے موقع پر ہم اپنے ان عظیم شہدا کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں ۔ جہنوں نے وطن عزیز کے دفاع کیلئے اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کیا اور اس عہد کی تجدید بھی کرتے ہیں کہ ان کے نقش قدم پر چلتے ہوئے ہم بھی نہ صرف وطن عزیز کیلئے قربانیاں پیش کرتے رہیں گے بلکہ ان کی روشن مثال ہمارے لیے ہمیشہ مشعل راہ ثابت ہوگی ۔انہوں نے کہا کہ بھارت چاہے جتنا بھی ظلم کرے کشمیری اپنی منزل حاصل کر کے رہیں گے وہ مقبوضہ کشمیر کی آزادی تک اپنی جد و جہد جاری رکھیں گے ۔ کشمیری عوام اپنی منزل کے قریب پہنچ چکے ہیں۔ اپنی ملی تاریخ کے اس انتہائی نازک موڑ پر اگر ہم نے اتحاد اور یکجہتی کا ثبوت دیا تو دنیا کی کوئی طاقت ریاست جموں و کشمیر کو مملکت خداداد پاکستان کا حصہ بننے سے نہیں روک سکتی ۔ میری دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ وہ وقت جلد لائے جب بھارتی مقبوضہ حصے کے مسلمان آزادی کی نعت سے سرفراز ہوں اور پوری ریاست پاکستان کا حصہ بنے ۔

 

Scroll To Top