کشمیر فریڈم فورم کے زیر اہتمام کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کیلئے تاریخ ساز آزادی مارچ،مکمل شٹر ڈاؤن،فضاء آزادی کے نعروں سے گونج اٹھی

azadi march

بھمبر ( بیو رو رپو رٹ ) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی دہشت گردی کیخلاف اور مقبوضہ کشمیر کے عوام کیساتھ اظہار یکجہتی کیلئے کشمیر فریڈم فورم کے زیر اہتمام بھمبر میں تاریخ ساز آزادی مارچ شہر بھر میں مکمل شٹر ڈاؤن درودیوار آزادی کے نعروں سے گونج اٹھے آزادی مارچ میں ہزاروں افراد کی شرکت UNO کے دفتر تک مارچ اقوام متحدہ اور بھارتی حکومت کیخلاف شدید نعرہ بازی بھارت مقبوضہ کشمیر میں مظالم کے پہاڑ توڑ رہا ہے انسانی حقوق کی تنظیموں اور عالمی برادری سمیت اقوام متحدہ کی خاموشی لمحہ فکریہ ہے اپنے کشمیری بھائیوں کی مدد کیلئے ہر قربانی دینے کیلئے تیار ہیں عالمی برادری اور حکومت پاکستان نے بھارتی مظالم کا نوٹس نہ لیا تو کنٹرول لائن توڑنے سے دریغ نہیں کرینگے آزادی مارچ کے مقررین کا خطاب تفصیلات کے مطابق کشمیر فریڈم فورم بھمبر کی دی گئی کال پر آزادی مارچ کے موقع پر بھمبر میں مکمل شٹر ڈاؤن کیا گیا اس دوران شہر کے تمام بازار مکمل طور پر بند ہو گئے شہر کی تاجر برادری ، سیاسی و سماجی تنظیموں کے نمائندگان و کارکنان،شہری ، سول سوسائٹی، سکول و کالجز کے طلباء، وکلاء اور کسانوں سمیت ہر مکتب فکر کے لوگ جلوسوں کی شکل میں احاطہ پرانی کچہری پہنچ گئے جہاں پر آزادی مارچ ایک بڑے جلسہ عام کی صورت اختیار کر گیا جس سے خطاب کرتے ہوئے کشمیر فریڈم فورم بھمبر کے صدر انجینئر خالد پرویز بٹ ، جنرل سیکرٹری محمد علی اختر، نائب صدر ابو شعیب نے کہا کہ آج بھمبر کی عوام نے فریڈم فورم کی کال پر تاریخ ساز اجتماع کر کے یہ ثابت کر دیا ہے کہ بھمبر کے عوام اپنے مقبوضہ کشمیر کے بھائیوں کیساتھ مکمل اظہار یکجہتی کرتے ہیں اور ان کے شانہ بشانہ ہیں انہوں نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں سوچے سمجھے منصوبے کے تحت کشمیری نوجوانوں کو معذور کر رہے ہیں پلیٹ گن کے بعد اب اوپل شیل کا بے دریغ استعمال کر کے جنگی جرائم کا ارتکاب کیا جا رہا ہے بھارتی افواج کے مظالم اب کشمیریوں کو کسی صورت اپنی جدوجہد سے نہیں روک سکتے انشاء اللہ کشمیری کشمیر کی آزادی تک اپنی جدوجہد ہر حال میں جاری رکھیں گے انہوں نے کہا کہ عالمی برادری اور اقوام متحدہ کی بھارتی مظالم پر خاموشی مجرمانہ ہے عالمی برادری او ر اقوام متحدہ بھارتی مظالم پر آواز اٹھانے کی بجائے خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں لیکن اب بھارت بھی یہ جان لے کہ کشمیری قوم جاگ چکی انشاء اللہ بھارت سے آزادی لیکر رہیں گے انہوں نے کہا کہ عالمی برادری ، اقوام متحدہ اور پاکستان نے اگر مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کے مظالم کا نوٹس نہ لیا تو پھر کشمیری کنٹرول لائن توڑنے سے گریزاں نہیں کرینگے آزادی مارچ سے چوہدری عارف سرفراز ایڈووکیٹ ، صدر انجمن تاجران حاجی چوہدری محمد عبداﷲ ، ڈاکٹر عبدالشکور راجہ، راجہ مظہر اقبال ایڈووکیٹ، راجہ آفتاب عظیم، راجہ نعیم گل، ذیشان مجاہد، مولانا ابرار نذیر، توصیف جرال ایڈووکیٹ، شکیل انجم ساون ، ماسٹر محمد اکرم پپو جٹ نے بھی خطاب کیادریں اثناء شرکاء آزادی مارچ نے شہر کے مختلف حصوں کا چکر لگایا اور بعد ازاں اقوام متحدہ کے مبصر دفتر کے باہر جا کر بھارت اور اقوام متحدہ کے خلاف شدید نعرہ بازی کی اور اس موقع پر اقوام متحدہ کے مبصر کو مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی طرف سے ڈھائے جانے والے مظالم کے خلاف مذمتی قرارداد پیش کی ۔

 

Scroll To Top