پیپلز پارٹی آزاد کشمیر نے انتخابات کے سائنٹیفک نتائج کو مسترد کرتے ہوئے احتجاج اور وائٹ پیپر شائع کرنے کا فیصلہ کر لیا

mjeeed

مظفرآباد(بیورو رپورٹ) پاکستان پیپلزپارٹی آزادکشمیر نے حالیہ انتخابات کو منظم طریقے سے پری پول دھاندلی اور سائنٹیفک طریقے سے نتائج کو مستر دکرتے ہوئے آزادکشمیر میں بڑے پیمانے پر احتجاج کرنے اور ان دھاندلی شدہ انتخابات کا وائٹ پیپر شائع کرنے کا فیصلہ کیا ۔اجلاس وزیراعظم آزادکشمیر وصدر پاکستان پیپلزپارٹی آزادکشمیر چوہدری عبدالمجید کی صدارت میں ایوان وزیراعظم میں منعقد ہوا ۔اجلاس میں سپیکر اسمبلی سردار غلام صادق، وزراء کرام آزادکشمیر ، سینئر وزیر چوہدری محمد یٰسین ، وزیر خزانہ چوہدری لطیف اکبر،وزیر ماحولیات شازیہ اکبر،وزیر ہائیرایجوکیشن چوہدری مطلوب انقلابی،وزیر تعلیم میاں عبدالوحید، وزیر تعمیرات عامہ چوہدری محمد رشید،چیئرمین معائینہ کمیشن اشفاق ظفر،ٹکٹ ہولڈر ز چوہدری مظہر،حنیف اعوان،سردار محمد حسین،سردار فہیم ربانی اور وزیراعظم کے میڈیا ایڈوائزر سید عزا دار حسین کاظمی، پولیٹیکل سیکرٹری عامر ذیشان جرال،پیپلزپارٹی میڈیا ایڈوائزر شوکت جاوید اور پیپلزپارٹی رہنما اور پارٹی کارکن شریک تھے۔ حالیہ انتخا بات کے نتائج کی روشنی میں تمام پارٹی امیدواروں نے اپنے اپنے حلقہ انتخاب میں ہونے والی منظم دھاندلی کے حوالے سے اجلاس کو آگاہ کیا ۔پیپلزپارٹی کے نامزدامیدواروں نے واضح اور دوٹوک الفا ظ میں ان انتخابات میں پری پول دھاندلی ،کشمیر کونسل سے اربوں روپے کی تقسیم اوربعض حلقوں میں پولنگ ٹیم کی تبدیلی، ووٹر لسٹوں میں ردوبدل ، انتخابی نتائج کو تبدیل کرنے کی مخصوص ٹیکنیک کے استعمال ریڑنگ آفیسروں کے یکطرفہ رویہ اور شناختی کارڈ میں ن لیگ کے امیدواروں کو آسانی پیدا کرنے سمیت اجلاس کو آگاہ کیا ۔ پارٹی کے نامزدامیدواروں نے اجلاس میں اپنی اپنی تجاویز پیش کیں اور تمام امیدواروں نے اس منظم دھاندلی کے خلاف بھرپور احتجاج کرنے کا اعلان کیا اور وائٹ پیپر کی تیاری کے لیے فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی کے قیام کا اعلان کیا جو اپنی سفارشات پارٹی چیئرمین بلاول بھٹو کو پیش کرے گی جس پر پارٹی چیئرمین اپنے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے ۔اجلاس میں امیدواروں نے ایکسٹرا بیلٹ پیپر، جعلی ووٹوں کی شکایات اور سارے معاملات میں پریزائڈنگ آفیسرز کی بدنیتی پر کیے گے پراسیس سے اجلاس کو آگاہ کیا اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صدر پاکستان پیپلزپارٹی آزادکشمیر ووزیراعظم آزادکشمیر چوہدری عبدالمجید نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آزادکشمیر کے انتخابات میں جس سائنٹیفک طریقے سے دھاندلی کرکے نتائج حاصل کیے گئے اس سے کشمیر کاز کو بہت نقصان پہنچا ۔وزیراعظم آزادکشمیر نے کہا کہ 20جولائی کی رات ار بوں روپے تقسیم کیے گئے اور وزیر امور کشمیر نے ہر حلقے کی یونین کونسل میں 10آدمیوں کی کمیٹی بنا کر ان انتخابات میں مطلوبہ نتائج حاصل کرنے کے لیے انہیں چیک جاری کیے ۔ وزیراعظم نے کہاکہ کشمیر کونسل کی طرف سے یہ پراسیس گزشتہ تین ماہ سے جاری تھا جس کی مسلسل نشاندہی کی جاتی رہی ۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کے ازالہ تک احتجاج جاری رہے گا اور ن لیگ کی حکومت سازی کے بعد سارے آزادکشمیر میں احتجاجی کال دی جائے گی اجلاس میں بتایا گیا کہ اپوزیشن جماعتوں نے 08لاکھ ووٹ حاصل کیے جبکہ ن لیگ نے 07لاکھ ووٹ حاصل کیے اجلاس کے بعد صدر جماعت وزیراعظم آزادکشمیر چوہدری عبدالمجید اور سیکرٹری جنرل چوہدری لطیف اکبر اور وزراء کی قیادت میں پیپلزپارٹی،پی ایس ایف ،پی وائی او و خواتین ونگ کی احتجاجی ریلی نکالی گئی اور ریلی میں ن لیگ حکومت کی طرف سے آزادکشمیر میں منظم دھاندلی کے خلاف شدید نعرے بازی کی گئی اجلاس میں وزراء کرام ممبر کشمیر کونسل ،پی وائی او کے چیئرمین صاحبزادہ ذوالفقار ،پی ایس ایف کے صدر شکور صدیقی، وزیراعظم کے میڈیا ایڈوائزر سید عزا دار حسین کاظمی، وزیراعظم کے پولیٹیکل ایڈوائزر عامر ذیشان جرال، پیپلزپارٹی کے میڈیا ایڈوائزر شوکت جاوید اور پارٹی کارکنو ں کی بڑی تعداد نے شرکت کی ۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم آزادکشمیر چوہدری عبدالمجید اور وزیر خزانہ چوہدری لطیف اکبر نے کہاکہ ن لیگ حکومت نے آزادکشمیر میں پری پول رکنگ اور سائنٹیفک طریقے سے نتائج تبدیل کرکے آزادکشمیر کے عوام کا مینڈیٹ چوری کیا اور تحریک آزادی کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا انہوں نے کہا کہ ن لیگ حکومت نے جس منظم طریقے سے دھاندلی کی وہ انہیں ہضم نہیں ہوگی انہوں نے کہا کہ جلد دھاندلی کے خلاف سارے آزادکشمیر میں احتجاجی کال دی جائے گی#

 

Scroll To Top