میرپور کچہری میں جوڈیشنل کمپلیکس کا سنگ بنیاد رکھ دیاگیا، آزادکشمیر عدلیہ پر بھرپورفخر ہے:جسٹس اعظم خان

cheef justice mrpr

میرپور(نامہ نگار)آزادجموں وکشمیرکے چیف جسٹس ، جسٹس محمداعظم خان نے کہاہے کہ بار اور بنچ کے مضبوط تعلق سے نہ صرف عدلیہ مضبوط ہوتی ہے بلکہ قانون کی تشریح سمیت لوگوں کوبروقت انصاف ملتا ہے۔ بار جتنی مضبوط ہوگی اتناہی زیادہ عدلیہ طاقتور ہوگی۔مجھے آزادکشمیرکی عدلیہ پر بڑا فخر ہے جس نے ہر دورمیں قانون اور انصاف کے مطابق فیصلے کیے۔ انصاف کی فراہمی میں بار ایسوسی ایشن نے ہمیشہ اہم اورمثبت کرداراداکیا۔ میرپور بار بڑی بار ہے جس نے قانون وانصاف کی فراہمی ، عدلیہ بحالی تحریک، تحریک آزادی کشمیرکے لیے بھرپورخدمات سرانجام دیں۔ میرپوربار نے بڑے نام پیدا کیے۔ ان خیالات کااظہار انھوں نے احاطہ کچہری میں نئے جوڈیشنل کمپلیکس کا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب سے ہائی کورٹ کے چیف جسٹس و چیف الیکشن کمشنرآزادکشمیرجسٹس غلام مصطفیٰ مغل، صدربار ایسوسی ایشن ذوالفقار احمد راجہ نے بھی خطاب کیا جبکہ تقریب میں سپریم کورٹ آزاد جموں و کشمیرکے جج صاحبان جسٹس محمدابراہیم ضیاء، جسٹس راجہ محمدسعید اکرم خان، جسٹس مسعود اے شیخ، سابق چیف الیکشن کمشنرآزادکشمیر جسٹس(ر) منیراحمدچوہدری، جسٹس (ر) محمدیونس طاہر،کمشنرمیرپورڈویژن راجہ امجدپرویز علی خان، ڈپٹی کمشنرچوہدری امجد اقبال، ایس ایس پی راجہ عرفان سلیم، ممتاز قانون دان حاجی منصف داد ایڈووکیٹ، سابق وائس چیئرمین بار کونسل راجہ خالد خان ایڈووکیٹ کے علاوہ ڈویژنل و ضلعی جوڈیشری ولاء افسران ، انتظامیہ، وکلاء سمیت شہریوں کی کثیرتعداد نے شر کت کی۔چیف جسٹس آزادکشمیرجسٹس محمداعظم خان نے کہاکہ ججز اور وکلاء آئین کی بالادستی ، قانون کی حکمرانی اور انصاف کی فراہمی کے لیے مل کرکام کر رہے ہیں۔ ججز اور وکلاء کے باہمی تعاون اور اشتراک سے لوگوں کو فوری اور سستاانصاف ملتاہے۔ انھوں نے کہاکہ معاشرے سے غربت ، ناانصافی، کرپشن اور لاء قانونیت کوختم کرنے کے لیے ایک موثراور فعال کردار کی ضرورت ہے جس میں وکلاء حضرات کا کلیدی کردار ہے۔
Scroll To Top