7ماہ کی تنخواہوں کی عدم عدائیگی،لیڈی ہیلتھ ورکز ایک بار پھر سڑکوں پر نکل آئیں،پولیو مہم کے بائیکاٹ کا اعلان

LHV Protest

بھمبر( بیورورپورٹ) بھمبر میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کا7ماہ کی تنخواہوں کی عدم ادائیگی پرشدیداحتجاج ،ہیلتھ ایمپلائز ایسوسی ایشن سمیت سینکڑوں ہیلتھ ورکرز سڑکوں پر نکل آئیں ،ہیلتھ ایمپلائز ایسوسی ایشن اور تنظیم غیر جریدہ بھمبر کا احتجاج کی حمایت کا اعلان ،16مئی کو شروع ہونے والی پولیو مہم کے بائیکاٹ کا اعلان ای پی آئی سرگرمیاں بھی معطل کردی گئیں اس ماہ کے آخر میں مدر اینڈ چائلڈ کئیر ویک کے بائیکاٹ کی بھی دھمکی،حکومت آزادکشمیر کے خلاف لیڈی ہیلتھ ورکرز کی نعرے بازی ،تفصیلات کے مطابق 7ماہ کی تنخواہوں کی عدم ادائیگی پربھمبر کی سینکڑوں لیڈی ہیلتھ ورکرزنے احتجاج کیا ،ڈی ایچ او آفس سے سینکڑوں لیڈی ہیلتھ ورکرز نے ایک احتجاجی ریلی نکالی ،جو شہر کے مختلف علاقوں سے ہوتی ہوئی ڈپٹی کمشنر آفس پہنچ گئی،اس موقعہ پر احتجاج میں شریک لیڈی ہیلتھ ورکرزنے حکومت کے خلاف نعرے بازی کی ،لیڈی ہیلتھ ورکرز کی احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی صدر ہیلتھ ایمپلائز ایسوسی ایشن فیڈریشن آ ف پاکستان چوہدری محمد یوساف ضلعی صدر ہیلتھ ایمپلائز ایسوسی ایشن چوہدری غلام مصطفی،صدر لیڈی ہیلتھ ورکرز شازیہ بٹ،ضلعی صدر غیر جریدہ ملازمیناچوہدری محمد ایوب ،چوہدری عبدالغفور اور سابق صدر و چئیر مین غیر جریدہ ملازمین میرپور چوہدری محمد افضل نے کہا کہ حکمرانوں کی نااہلی کے باعث سینکڑوں لیڈی ہیلتھ ورکرز اپنے حق کے لیے سڑکوں پر ہیں حکمرانوں کو شرم آنی چاہیے کہ وہ اپنی عیاشیوں میں مگن ہیں جب کہ قوم کی مائیں ،بہنیں اور بیٹیاں اپنے حقوق کے حصول کے لیے سڑکوں پردھکے کھا رہی ہیں،اکثر لیڈی ہیلتھ ورکرز اپنے کنبے و خاندان کی واحد کفیل ہیں مگرانہیں تنخواہوں کی ادائیگی نہیں کی جا رہی ہے ،ان کے گھروں کے چولہے بجھ رہے ہیں لیکن حکمران طبقے کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی،وہ ملازمین کے مسائل کے حل میں کوئی دلچسپی نہیں رکھتے ،انہوں نے کہا کہ اسلام آباد ،گلگت بلتستان ،پنجاب سمیت تمام صوبوں کی لیڈی ہیلتھ ورکرز کے مسائل وہاں کی حکومتوں نے ترجیحی بنیادوں پر حل کیے مگر آزادکشمیر کی لیٖڈی ہیلتھ ورکرز کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیوں کیا جا رہا ہے ،انہوں نے کہا کہ جون 2012 سے حکومت نے لیڈی ہیلتھ ورکرز کو بقایا جات بھی ادا نہیں کیے ،گزشتہ 7ماہ سے تنخواہیں بند ہیں دو لیڈی ہیلتھ ورکرز اسی دورانیے میں انتقال کر گئیں ان کے خاندان شدید مالی مشکلات کا شکار ہیں ،انہوں نے اعلان کرتے ہوئے کہا کہ اگر لیڈی ہیلتھ ورکرز کو7ماہ کی تنخواہوں کی ادائیگی فوری کی جائے اس موقعہ پر فیصلہ کیا گیا کہ16مئی سے شروع ہونے والی 3روزہ پولیو مہم کا بائیکاٹ کیا جائے گاجبکہ ای پی آئی کی تمام سرگرمیاں معطل رہیں گی، اس ماہ کے آخر میں ماں اور بچے کی صحت کے حوالے سے منایا جانے والا ہفتہ کا بھی بائیکاٹ کر سکتے ہیں ،انہوں نے وزیر اعظم آزادکشمیر چوہدری عبدالمجید ،چیف سیکرٹری آزادکشمیر اور چیف جسٹس ہائی کورٹ سے مطالبہ کیا کہ وہ اس کا نوٹس لیں اور انہیں تنخواہوں کی فوری ادائیگی کے لیے اقدامات کریں ۔
Scroll To Top