لبریشن فرنٹ کا سرینگر میں احتجاجی مظاہرہ، یاسین ملک سمیت درجنوں رہنما اور کارکن گرفتار

Yasir Malik Arrest

سری نگر(یوا ین پی) مقبوضہ کشمیر میں جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ نے بھارت میں زیر تعلیم کشمیری طلباء پر مسلسل حملوں ،مزار شہداء کی بے حرمتی اور معصوم کشمیری نوجوانوں پر کالا قانون پبلک سیفٹی ایکٹ لاگو کرنے کے خلاف سرینگر میں احتجاجی مظاہرہ کیا جبکہ بھارتی پولیس نے مظاہرین کے خلاف طاقت کا وحشیانہ استعما ل کرکے درجنوں رہنماؤں اور کارکنوں کو گرفتار کرلیا۔ یواین پی کے مطابق اس سے پہلے بھارتی پولیس نے جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے چےئرمین محمد یاسین ملک کو ان کے گھر پر چھاپے کے دوران گرفتار کرلیا تھا۔ انہیں سرینگر کے کوٹھی باغ تھانے میں نظربند کیا گیا ہے۔ سرینگر میں مائسمہ سے لالچوک کی طرف احتجاجی مارچ کی قیادت لبریشن فرنٹ کے رہنما بشیر احمد بٹ اور حریت رہنما شبیر احمد ڈارکررہے تھے ۔ بھارتی پولیس نے بشیر احمد بٹ ، ،نور محمد کلوال ،شیخ عبدالرشید، ظہور احمد بٹ، شبیر احمد ڈار، پروفیسر جاوید، غلام رسول ہزاری،علی محمد بٹ، عرفان احمد خان اور امتیاز احمد گنائی سمیت درجنوں رہنماؤں اور کارکنوں کو گرفتار کرلیا۔
Scroll To Top