پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں بڑھنے کا نتیجہ، ملک میں مہنگائی مزید بڑھ گئی

یک ہفتے میں گھی، کوکنگ آئل، چکن، دالوں، بیف اور مٹن سمیت 19 اشیائے ضروریہ مہنگی ہو گئیں۔

ادارہ شماریات نے مہنگائی پر ہفتہ وار رپورٹ جاری کر دی جس کے مطابق ایک ہفتے کے دوران دال مونگ کی قیمت 4 روپے اضافے کے بعد اوسطاً 233 روپے 54 پیسے فی کلو ہو گئی۔دال چنا کی قیمت ایک  روپے 28 پیسے بڑھ کر 141روپے 55 پیسے فی کلو ہو گئی۔

ایک ہفتے کے دوران چکن کی فی کلو قیمت 8 روپے 44 پیسے بڑھ گئی جبکہ ملک میں چکن کی اوسط قیمت 180 روپے 52 پیسے ہو گئی۔گھی 6 روپے 34 پیسے فی کلو اور کیلا 2 روپے 28 پیسے فی درجن مہنگا ہوگیا۔ ادارہ شماریات کے مطابق ایک ہفتے کے دوران دال مسور، دال ماش، بیف، مٹن، گڑ، سرسوں کے تیل،ماچس اور واشنگ سوپ کی قیمتیں بھی بڑھی ہیں۔

ادارہ شماریات کے مطابق پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں بڑھنے سے بھی مہنگائی کی اوسط شرح میں 0.32 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ ایک ہفتے کے دوران 8 اشیاء کی قیمتوں میں کمی ہوئی ہے۔ ٹماٹر 11 روپے 13 پیسے فی کلو سستا ہو گیا جس کے بعد ملک میں اوسط قیمت 64 روپے فی کلو ہو گئی۔

انڈے 13 روپے فی درجن سستے ہوئے جبکہ ایل پی جی کا گھریلو سلنڈر 20 روپے 24 پیسے سستا ہوا۔ایک ہفتے کے دوران چینی کی قیمت ایک روپیہ 24 پیسے کم ہو کر اوسطاً 91 روپے 71 پیسے ہو گئی ہے جبکہ  20 کلو آٹے کا تھیلا 2 روپے سستا ہو کر اوسطاً 947 روپے 17 پیسے میں دستیاب ہے۔

Scroll To Top