ضلع کولگام اور کپواڑہ میں میں سکیورٹی فورسز اور عسکریت پسندوں کے مابین جھڑپوں میں 4کشمیری نوجوان شہید

سرینگر(مانیٹرنگ ڈیسک)مقبوضہ جموں و کشمیر کے ضلع کولگام اور کپواڑہ میں میں سکیورٹی فورسز اور عسکریت پسندوں کے مابین جھڑپوں  میں 4کشمیری نوجوان شہیدہو گئے۔ساوتھ ایشین وائرکے مطابق جمعہ کی صبح جموں و کشمیر میں جنوبی کشمیر کے کولگام میں سیکیورٹی فورسز کے ساتھ مقابلے میں3 کشمیری نوجوانوں کو ہید کر دیا گیا۔جبکہ 3 فوجی اہلکار زخمی ہوئے ۔ شہید نوجوانوں کا تعلق جیش محمد سے بتایاجاتاہے۔
اس سے قبل ایک عہدیدار نے بتایا تھا کہ پولیس ، فوج کی 9 آر آر اور سی آر پی ایف کی مشترکہ ٹیم نے علاقے میں عسکریت پسندوں کی موجودگی کے بارے میں مخصوص اطلاع پر کورڈن اور سرچ آپریشن شروع کیا۔
اس سے قبل مقبوضہ جموں و کشمیر کے سرحدی ضلع کپواڑہ کے کیرن سیکٹر میں جمعرات کے روز فوج نے ایک کشمیری نوجوان عسکریت پسند کو شہید کردیا ۔
بھارتی فوج کے ایک افسر نے الزام لگایا کہ لائن آف کنٹرول کے نزدیک تعینات سکیورٹی فورسز کے اہلکاروں نے کیرن سیکٹر میں صبح لائن آف کنٹرول پر تین سے چار عسکریت پسندوں کے ایک گروپ کو بھارتی سرحد کی طرف گھستے ہوئے دیکھا۔ جس کے بعد سیکیورٹی فورسز نے فائرنگ کی اور دونوں اطراف سے جھڑپ شروع ہو گئی ۔اس جھڑپ کے دوران ایک عسکریت پسند شہید ہو گیا۔ اس کی لاش برآمد کر لی گئی ہے اور اس سے ایک اے کے 47 رائفل اور دیگر گولہ بارود بھی برآمد کیا گیا ہے۔ سیکیورٹی فورسز کے اہلکار آس پاس کے علاقوں میں تلاشی مہم چلا رہے ہیں۔
ساوتھ ایشین وائر کے مطابق ضلع کولگام میں 2006سے اب تک45مختلف واقعات میں76 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔ جبکہ131 واقعات میں156عسکریت پسند اور73 شہری شہید کئے گئے ۔ضلع میں اسی عرصے میں38سیکورٹی فورسز کے اہلکار بھی مارے گئے۔
 مقبوضہ جموں وکشمیر میں رواں سال 2020میں166کشمیریوں کو شہید کر دیا گیا۔جن میں جنوری میں 22،فروری میں 12، مارچ میں 13،  اپریل میں 33 ، مئی میں 16، جون میں 51اور جولائی میں 19کشمیریوں کو شہید کیا گیا۔ان میں 17عام شہری بھی شامل ہیں۔جبکہ 33سیکورٹی اہلکار ہلاک ہوئے۔پولیس کے مطابق رواں سال اسلحہ برآمدگی کے82واقعات ریکارڈ کئے گئے۔ساوتھ ایشین وائر کے مطابق اس سال دھماکوں کے 19واقعات میں21شہریوں اور ایک سیکورٹی اہلکار کی اموات ہوئیں جبکہ15سیکورٹی اہلکارزخمی ہوئے۔سال 2020میں 75مختلف واقعات میں 154افراد کو گرفتار کیا گیا۔
مقبوضہ جموں وکشمیر میں جون 2020میںبھارتی فورسز کے ہاتھوں51کشمیریوں کو شہید کردیا گیا۔ جو کہ2005کے بعد سے اب تک ایک ماہ میں شہید ہونے والے کشمیریوں کی سب سے زیادہ تعداد ہے۔
Scroll To Top