لیڈی ہیلتھ ورکرز کیس، توہین عدالت کا نوٹس جاری کرینگے، سپریم کورٹ

news-1539929072-4650

اسلام آباد( آن لائن)سپریم کورٹ آف پاکستان نے لیڈی ہیلتھ ورکرز کیس میں 5 ماہ کی تنخواہ جاری نہ کرنے پر سیکرٹری ہیلتھ سندھ کو شوکاز نوٹس جاری کردیا،عدالت نے ریمارکس دیئے ہیں کہ لیڈی ہیلتھ ورکرز کو 5 نومبر تک تنخواہ جاری کریں،تنخواہ جاری نہ کی تو توہین عدالت کا نوٹس جاری کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ثاقب نثارکی سربراہی میں بنچ نے لیڈی ہیلتھ ورکرز کیس کی سماعت کی ،درخواستگزار نے بتایا کہ ہمیں 5 ماہ سے تنخواہ اوربقایا جات نہیں دیئے گئے،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ عید سے پہلے حکم دیا تھا ،ابھی تک تنخواہ جاری نہیں کی گئی،انہوںنے کہاکہ ایل ایچ ڈبلیو ہرعلاقے میں جاکر انسدادپولیوکے قطرے پلاتی ہیں،اس خدمت پر ان کو تنخواہ بھی نہیں دی جارہی۔
چیف جسٹس پاکستان نے استفسار کیاکہ سیکرٹری ہیلتھ سندھ کیوں پیش نہیں ہوئے؟،اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل سندھ نے کہا کہ وہ تھر کے حوالے سے میٹنگ میں ہیں۔عدالت نے 5 ماہ کی تنخواہ جاری نہ کرنے پرسیکرٹری ہیلتھ سندھ کو شوکاز نوٹس جاری کردیا،عدالت نے ریمارکس دیئے کہ لیڈی ہیلتھ ورکرز کو 5 نومبر تک تنخواہ جاری کریں،تنخواہ جاری نہ کی تو توہین عدالت کا نوٹس جاری کیا جائے گا۔
Scroll To Top