گڈ گورننس کے دعویداروں نے ملازمین کو تنہا چھوڑ دیا، مطالبات کی عدم منظوری پر نیو سٹی ٹیچنگ ہسپتال کا عملہ سڑکوں پر نکل آیا،29دسمبر کی ڈیڈ لائن

ehtijaaj

میرپور(کے این آئی)نیوسٹی ٹیچنگ ہسپتال میرپور کے ہڑتالی ملازمین کی احتجاجی ریلی ٹیچنگ ہسپتال سے شروع ہو کر چوک شہیداں میرپور میں اختتام پذیر ہوئی ۔ جہاں ریلی ایک بڑے احتجاجی جلسہ کی شکل اختیار کر گئی ۔ احتجاجی ریلی سے صدرسپریم کورٹ بار سید نشاط کاظمی ایڈووکیٹ، صدر انجمن تاجران اتحاد گروپ چوہدری محمود ، سابق وزیراعظم چوہدری عبدالمجید کے فرزند چوہدری قاسم مجید ، مرکزی سیکرٹری جنرل ایپکا راجہ رشید ، صدر پیرا میڈیکل ضلع میرپور راجہ شہزاد ، اکرم مغل جنرل سیکرٹری ایپکا ضلع میرپور ، صدر غیر جریدہ ملازمین سید قیصر شیراز کاظمی ، صدر غیرجریدہ ملازمین خواجہ لیاقت علی ، محمد منشاء قریشی جنرل سیکرٹری اکلاس یونین ، غفار احمد چیئرمین ایکشن کمیٹی ٹیچنگ ہسپتال میرپور ،محمد نذیر جرال نائب صدر ٹیچرز آرگنائزیشن ضلع میرپور ، راشد محمود ایڈووکیت صدر تحفظ حقوق کمیٹی اور دیگر ملازمین ، سیاسی و سماجی شخصیت نے خطاب کیا۔احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ نیوسٹی ٹیچنگ ہسپتال میرپور کے ملازمین کے تمام مطالبات جائز اور حق پر مبنی ہیں حکومت آزادکشمیر کی طرف سے جبر وظلم ناقابل برداشت ہو چکا ہے حکومت اور وزارت صحت ایک خاص ایجنڈے کے تحت نیوسٹی سے تعلق رکھنے والے ملازمین کا معاشی قتل عام کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ حکومتی وزراء صرف تسلیوں کیلئے ملازمین سے سودا بازی نہ کریں جب تک ان کے ہر ایک جائز مطالبے کو فوری طورپر حل نہیں کر دیا جاتا اس وقت تک کسی بھی صورت چین سے نہیں بیٹھیں گے ۔ مقررین نے کہا کہ حکومت ملازمین کش پالیسیاں اپنائے ہوئے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے ملازمین گزشتہ چھ ماہ تنخواہوں سے محروم ہیں جبکہ گزشتہ پانچ سالوں سے ان ملازمین کو مستقل نہیں کیا جارہا ہے سابقہ دور حکومت میں جیسے حالات تھے موجودہ حکومت اس سے دو ہاتھ آگے نکل چکی ہے ملازمین کے حقوق سلب کیے جارہے ہیں۔ لیکن اس مرتبہ ملازمین اپنے حق کیلئے جو جنگ لڑ رہے ہیں ان ساتھ کھڑے ہیں اور انکے جائز مطالبات کے حل کیلئے ہر ممکن اقدامات کیے جائیں گئے اور ہر فورم پر ملازمین کے حقو ق کی آواز بلند کی جائے گی ۔ اس موقع پر ملازمین رہنماؤں نے کہا کہ ملازمین گزشتہ 16دنوں سے ہڑتال پر ہیں لیکن ہمارے مطالبات پر رتی برابر توجہ نہیں دی گئی جس کیو جہ سے مجبورہو کر ہڑتا ل کرنے کا اعلان کیا اگر ہمارے مطالبات کو حل نہ کیا گیا تو 29دسمبر کو اس سے بڑی احتجاجی ریلی نکال کر بھرپور احتجاج کیاجائیگا جس کی تمام تر ذمہ داری حکومت اور انتظامیہ پر عائد ہو گی ۔مقررین نے کہا کہ ملازمین کے مسائل کو حل کرنا حکومت اور متعلقہ وزارت کی ذمہ داری ہے لیکن حکومت اور وزارت انکے مسائل حل کرنے میں ناکام دکھائی دے رہی ہے حکومت فی الفور ہڑتالی ملازمین کے تمام مطالبات کو تسلیم کرتے ہوئے ان کو نارمل میزانیہ اور تنخواہیں ادا کرئے بصورت دیگر میرپور کی تمام تاجر برادری ، سیاسی و سماجی شخصیت اور سول سوسائٹی کے افراد کے احتجاج میں شریک ہونگے ۔
Scroll To Top