دوکانوں کے اندر قائم پٹرول پمپ میں اچانک آگ بھڑک اٹھی ، دوکانیں لپیٹ میں آ گئیں، فائر برگیڈ کا عملہ سامان نہ ہونے کی وجہ سے آگ پر قابو نہ پا سکا،مقامی نوجوانوں نے قابو پا لیا

trust-fire-afp-640x480

بھمبر( ڈسٹرکٹ رپورٹر)بھمبر کے نواحی گاؤں پنڈی جہونجہ میں دوکانوں کے اندر قائم پٹرول پمپ میں صبح 9بجے کے قریب اچانک آگ بھڑک اٹھی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے دوکانوں کو اپنی لپیٹ میں لے لیا فائر برگیڈ کا عملہ سامان نہ ہونے کی وجہ سے آگ پر قابو نہ پا سکا گاؤں کے نوجوانوں اور واٹر سپلائی کے ٹینکروں کی مدد سے تقریباً دیڑھ گھنٹہ کے بعد آگ پر قابو پایاجا سکا دوکانوں کی چھتیں اور دیواریں آگ کی تپش کی وجہ سے زمین بوس ہو گئی واقعہ کی اطلاع ملتے ہی انتظامیہ موقع پر پہنچ گئی عوام علاقہ کا حکومت سے فائر برگیڈ کو ایکٹو کرنے کا مطالبہ تفصیلات کیمطابق گزشتہ روز صبح 9بجے کے قریب بھمبرکے نواحی گاؤں پنڈی جہونجہ میں حاجی محمد ایوب کے منی پٹرول پمپ جوکہ دوکانوں کے اندر قائم کیا گیا تھا اچانک آگ بڑھک اٹھی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے دوکانوں کو اپنی لپیٹ میں لے لیا آگ کے شعلے آسمانوں سے باتیں کرنے لگے حادثے کی جگہ لوگوں کی بڑی تعداد جمع ہو گئی واقعہ کی اطلاع فوری طور پر 1122کو دی گئی مگر سامان ناکافی ہونیکی وجہ سے آگ پر قابو پانے میں ناکام رہے آگ بجھانے میں واٹر سپلائی کے ٹینکروں اور مقامی لوگوں نے اپنی مدد آپ کے تحت اہم کردار ادا کیا جسکی وجہ سے قریبیْ آبادی بڑے نقصان سے بچ گئی جبکہ آگ کی لپیٹ میں آنے والی دوکانیں زمین بوس ہو گئی بھمبرکے سیاسی و سماجی حلقوں نے سینئر وزیر چوہدری طارق فاروق اور ضلعی انتظامیہ سے مطالبہ کیاہے کہ شہر بھر سے گیس فلنگ اور پٹرول کی دوکانیں باہر منتقل کی جائین تاکہ کوئی بڑا حادثہ نہ ہو سکے ۔
Scroll To Top